ہندوستان

جب تک کسانوں کا قرض معاف نہیں ہوگا مودی کو سونے نہیں دیں گے: راہل گاندھی

نئی دہلی۔ ۱۸؍دسمبر: نریندر مودی کی قیادت والی مرکزی حکومت پر سخت حملہ بولتے ہوئے کانگریس صدر راہل گاندھی نے کہا کہ مرکزی حکومت نے کسانوں کا قرض معاف نہیں کیا اور سرمایہ داروں کے قرض معاف کر دیئے لیکن کانگریس اس پر خاموش نہیں بیٹھے گی اور وہ کسانوں کے قرض معاف کروائے گی ۔ راہل گاندھی نے کہا کہ جن تین ریاستوں میں کانگریس اقتدار میں آئی ہے ان میں سے دو ریاستوں نے کسانوں کے قرض معاف کر دیئے اور تیسری ریاست جلد کرنے والی ہے ۔پارلیمنٹ میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے راہل گاندھی نے کہا کہ جب تک مرکزی حکومت کسانوں کا قرض معاف نہیں کرے گی اس وقت تک ہم وزیر اعظم کو سونے نہیں دیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے قرض معافی کے لئے دس دن مانگے تھے لیکن ہم نے یہ دو دن میں ہی کر کے دکھا دیا جبکہ نریندر مودی حکومت کو ساڑھے چار سال ہو گئے ہیں، انہوں نے کسانوں کا ایک روپیہ بھی معاف نہیں کیا ہے ۔ اس موقع پر انہوں نے کسانوں کو یقین دلایا کہ کانگریس اور تمام حزب اختلاف کی پارٹیاں ان کے ساتھ کھڑی ہیں۔رافیل ڈیل پر حکومت کو اپنی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے راہل گاندھی نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے رافیل سودے میں انل امبانی کو فائدہ پہنچایا ۔ انہوں نے کہا کہ حزب اختلاف رافیل سودے پر لگاتار جے پی سی سے جانچ کا مطالبہ کر رہی ہے لیکن حکومت اس پر کوئی توجہ ہی نہیں دے رہی ۔ مرکز ی حکومت نے سپریم کورٹ میں جو حلف نامہ دیا ہے عدالت نے اس حلف نامہ کو غلط سمجھا، اس پر کانگریس صدر راہل گاندھی نے کہا کہ ابھی تو بہت غلطیاں سامنے آ ئیں گی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker