ہندوستان

تاجر کے ساتھ بدکلامی کرنے پر پولس کے خلاف تاجروں کی ہنگامہ آرائی

دیوبند۔۱۰جنوری (رضوان سلمانی) نوانٹری میں ایم بی ڈی چوک پر پہنچی مال سے لدی ایک تاجر کی گاڑی پولیس کے ذریعہ روکے جانے پر تاجران نے ہنگامہ کردیا ۔ موقع پر پہنچے تھانہ انچارج نے انہیں سمجھا بجھاکر خاموش کیا ،تاجروں کا الزام ہے کہ ڈیوٹی پر تعینات پولیس اہلکاروں نے گاڑی ڈرائیورکے ساتھ مارپیٹ کی اور تاجروں کے ساتھ بھی نازیباسلوک کیا۔ موصولہ اطلاع کے مطابق گزشتہ دیر شام نوانٹری کے وقت علاقہ کے ایک تاجر کے مال سے بھری گاڑی ایم بی ڈی چوک پر پہنچی ، ڈیوٹی پر تعینات پولیس اہلکاروں نے گاڑی کو روک لیا ،گاڑی ڈرائیور سے پولیس اہلکاروں کی بحث شروع ہوگئی،اسی دوران ایک پولیس اہلکار نے ڈرائیور کو تھپڑ ماردیا ،موقع پر پہنچے تاجروں نے ڈرائیور کے ساتھ مارپیٹ کی مخالفت کی تو پولیس اہلکاروں کی اس سے بھی بحث ہوگئی، تاجروں اورپولیس اہلکاروں کے درمیان نازیبا سلوک کی اطلاع ملنے پر موقع پر تاجران جمع ہوگئے ، تھانہ انچارج ابھیشیک سروہی بھی موقع پر پہنچ گئے اور انہوں نے تاجروں کو سمجھا بجھاکر خاموش کیا ، نگر ادھیوگ ویاپار منڈل کے صدر منوج سنگھل اورکریانہ ایسوسی ایشن کے صدر راجیش گپتا نے الزام عائد کیا کہ ڈپو پر تعینات پولیس اہلکاروں کے ذریعہ تاجروں کے ساتھ نازیبا سلوک کرنا اور گاڑی ڈارئیور کے ساتھ مارپیٹ کرنا افسوس ناک ہے جسے کسی قیمت پر برداشت نہیں کیا جائیگا۔ تھانہ انچارج ابھیشیک سروہی نے بتایا کہ نوانٹری کے وقت گاڑی بازار میں آگئی تھی ،ان کے مطابق یہ معاملہ موقع پر ہی سلجھادیا گیا ہے ، پولیس اہلکاروں کے ذریعہ مارپیٹ کرنے سے انہوں نے صاف انکار کردیا ۔ اس دوران اروند بنسل، دیپک راج سنگھل، اتل جین، ویبھو اگروال، سنجیو جین وغیرہ موجود رہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker