ہندوستان

غلط فہمیاں دور ہوگئیں ،بیان بازی بند کریں : گلزار احمد اعظمی

وضاحتی بیان

ممبئی ۲۸؍ جنوری ۲۰۱۹ء
جمعیۃعلماء مہاراشٹر کے حالیہ انتخاب پر کچھ غلط فہمیاں پیدا ہوگئی تھیں ،لیکن صدر جمعیۃعلماء ہند حضرت مولانا سید ارشد مدنی دامت برکاتہم کی موجودگی میں وہ غلط فہمیاں دور کرا دی گئیں۔اب کارکنان جمعیۃعلماء میں کوئی اختلاف و انتشار نہیں ہے۔
اس موقع پر میں چند باتوں کی بطور خاص وضاحت کرناضروری سمجھتا ہوں ،اول یہ کہ بھیونڈی میں جمعیۃعلماء مہاراشٹر کے مجلس منتظمہ کے اجلاس کے انعقاد کی تجویز بندہ نے ہی رکھی تھی،اس میں مولانا حلیم اللہ قاسمی صاحب کا کوئی دخل نہیں تھا،اس کی سب سے اہم وجہ یہ تھی کہ عروس البلاد ممبئی میں کم و بیش 1800اراکین منتظمہ کے قیام و طعام کا نظم کرنا مشکل تھا۔میں شکر گزار ہوں جامعہ کے ناظم اعلیٰ و اراکین کا کہ انہوں نے اجلاس کے لئے اپنا کیمپس اور نو تعمیر بلڈنگ کو مہمانوں (شرکاء اجلاس)کے لئے فراہم کی،اور ان کی ضیافت و اکرام کا نظم کیا ۔
دوسرے یہ بات بھی غلط ہے کہ صدر جمعیۃعلماء ہند کو اجلاس کے موقع پر بنفس نفیس شریک ہونے سے روکا گیا ،حضرت مولانا اپنی علالت کی وجہ سے ڈاکٹروں کے مشورہ پر ممبئی تشریف نہیں لاسکے تھے ،لیکن اس اختلاف و انتشار کی بناء پر جس کی وجہ سے جمعیۃعلماء مہاراشٹرکا وہ عظیم کام جو بے گناہوں کے مقدمات کی پیروی کا چل رہا ہے متاثر ہوسکتا تھا،نیز علاقائی عصبیت کو ہوا دی جارہی تھی جو جماعت کے لئے نہایت نقصاندہ ثابت ہوسکتی تھی ۔اس لئے حضرت صدر محترم اپنی علالت کے باوجود کارکنان جمعیۃمیں اتحاد و اتفاق پیدا کرنے کی غرض سے ۲۵؍ جنوری کو ممبئی تشریف لے آئے ۔
آخری بات کہ بعض ناقدین یہ غلط پروپیگنڈہ کر رہے ہیں کہ ناچیز نے جنرل سکریٹری کا عہدہ حاصل کرنے کے لئے یہ تمام بکھیڑہ پیدا کیا تھا ،یہ بھی سراسراتہام اور غلط ہے۔
میں ان تمام حضرات سے جنہوں نے سوشل میڈیا پر اختلافی محاذ کھول رکھا ہے مؤدبانہ درخواست کرتا ہوں کہ خدا را اس سلسلہ کو بند کردیا جائے۔
اور دعاء کی جائے کہ ہم خدام جمعیۃعلماء پھر باہم شیر و شکر ہوکر ان قوتوں کا مقابلہ کر سکیں جو امت مسلمہ کو اپنا شکار بناتی ہیں۔

گلزار احمد اعظمی
سکریٹری قانونی امداد کمیٹی ،جمعیۃعلماء مہاراشٹر
نوٹ:مدیر محترم ! اس وضاحتی بیان کو اپنے مؤقر روزنامہ میں شامل اشاعت فرما کر ممنون فرمائیں ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker