ہندوستان

اسلام نے خواتین کو وقار سے جینے کا حق عطا کیا ہے:  ڈاکٹر حنا حسین

آگرہ۔۶؍اپریل: (اظہر عمری) تاج نگری واقع سنی مرکزی دارالعلوم غریب نواز نگلہ میواتی میں جشن دستار حفظ قرآن کے تین روزہ جلسہ کا اہتمام کیاگیا،اس عظیم شان جلسہ کے پہلے روز مسلم خواتین کے لیئے اپنا حق جانو اور فرض کو پہچانو عنوان پر ایک روزہ اجلاس کا انعقاد کیاگیا، اس موقع پر مقامی خواتین کی صحت اور سماجی اہمیت پر گفتگوکی گئی ، ڈاکٹر حنا حسین نے کہا کہ مذہب اسلام میں خواتین کو بلند مرتبہ عطا کیا ہے، بچیوں کو زندہ دفن کرنے کی ظالمانہ عمل کو کو ختم کر اُور بیوہ سے شادی کر اﷺنے خواتین کو وقار کے ساتھ جینے کا حق کی دیا، ا سلام والد کی جائیداد میں بیٹی کے حصے کی وقالت کرتا ہے، انہوں نے کہا کہ خواتین کے لئے شوہر کا مرتبہ سب سے اعلی ہے، مرد کے لئے والدین کی خد مات کے ساتھ بی بی بچوں کی اچھی پرورش کرنے ذمہ داری بھی ہے، پانچ وقت کی نماز پابندی سے ادائیگی اور رمضان کے دوزے رکھنے کے ساتھ جو عورت اپنے شوہر کی خدمت کرتی ہے ، وہ جنت میں جائے گی، سماجی کارکن مالکا بیگم نے پردے کی اہمیت بتاتے ہوئے کہاکہ پردوہ اصل میں ایک خفاظتی ڈھال ہے، جو غیر مررکی بری نظر سے خواتین کی حفاظت کرتاہے ، اللہ نے ہر چیز کی حفاظت کے لئے اُس کے اُپر پردے کے طور پر چھلکے کی جلد رکھی ہے،مثال کے طور پر جب کسی سبزی یا پھل پر چھلکا اُتار دیا جاتا ہے تو تب وہ کچھ دیر بعد اُس کو نقصان ہونے لگا ہے ۔ جلسہ میںتمام خواتین نے اُردو ہندی کے ساتھ ہی انگریزی ، عربی میں بھی تقریر کر اسلام کی تعلیم پر روشنی ڈالی ، ساتھ ہی کئی بچیوں نے نعتیہ کلام پیش کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker