ہندوستان

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی ابتدائی تعلیم نے

 میری صلاحیتوں کو پروان چڑھایا: جنید احمد

سول سروسیز امتحان میں تیسری رینک حاصل کرنے والے اے ایم یو کے فرزند کا اظہار خیال
علی گڑھ، 8؍اپریل: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں میری ابتدائی تعلیم نے ہر اعتبار سے میری شخصیت کو نکھارا اور میری صلاحیتوں کو پروان چڑھایا۔ ابتدائی تعلیم نے میرے اندر مقصدیت پیدا کی اور میں آج جو کچھ بھی ہوں وہ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کا فیض ہے‘۔ ان تاثرات کا اظہار جنید احمد نے کیا جنھوں نے یوپی ایس سی کے سول سروسیز کے امتحان میں تیسری رینک حاصل کی ہے۔ 759؍کامیاب امیدواروں میں تیسرا مقام حاصل کرنا فخر کی بات ہے ۔ جنید احمد نے اس کامیابی پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ انھوں نے چھٹی سے بارہویں جماعت تک اے ایم یو کے ایس ٹی ایس اسکول میں تعلیم حاصل کی۔ اس کے بعد انھوں نے الیکٹرانکس انجینئرنگ میں گریجویشن کیا ۔ گزشتہ سال کے سول سروسیز امتحان کے نتائج میں جنید احمد نے 352ویں رینک حاصل کی تھی اور وہ جوائنٹ کمشنر، انکم ٹیکس کی ٹریننگ حاصل کررہے تھے۔ جنید احمد کی اس کامیابی پر انھیں مبارکباد پیش کرتے ہوئے وائس چانسلر پروفیسر طارق منصور نے کہاکہ اس قابل فخر کارکردگی سے اے ایم یو کے طلبہ کو بڑی تحریک ملی ہے ، جونئے جوش و ولولہ کے ساتھ انھیں کے نقش قدم پر چلنا چاہتے ہیں۔ قابل ذکر ہے کہ جنید احمد کے علاوہ دیگر پانچ طلبہ نے بھی سول سروسیز امتحان 2019میں کوالیفائی کیا ہے، جنھوں نے علی گڑھ مسلم یونیورسٹی نے تعلیم حاصل کی۔ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) کی ریزیڈنشیل کوچنگ اکیڈمی سے دو طلبہ ڈاکٹر بشریٰ بانو (پی ایچ ڈی ، مینجمنٹ) اور محمد ہاشم (بی ٹیک، مکینیکل)نے بالترتیب 277ویں اور 448ویں رینک حاصل کی۔ ویر پرتاپ سنگھ (بی ٹیک، مکینیکل) نے 92ویں، بابر علی چگتّا (بی اے، پولیٹیکل سائنس) نے 364ویں ، اور وویک کمار دوساد (بی ایس سی، فزکس) نے 749ویں رینک حاصل کی۔ وائس چانسلر پروفیسر طارق منصور اور ریزیڈنشیل کوچنگ اکیڈمی کے ڈائرکٹر پروفیسر صغیر احمد انصاری نے کامیاب امیدواروں کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker