ہندوستان

گائو ں والی کی رکن اسمبلی کے رہائش گاہ پر پنچایت

رکن اسمبلی کے ساتھ بدسلوکی کرنے والوں کی مذمت،پولیس سے سخت کارروائی کا مطالبہ

دیوبند۔۱۵؍ اپریل(ایس۔چودھری) ٹھاکر اکثریتی گاؤںرنکھنڈی میں علاقائی ممبر اسمبلی کنور برجیش سنگھ کے ساتھ کچھ لوگوں کے ذریعہ بدسلوکی اور گالی گلوچ کرنے کے سلسلہ میں گاؤں رنکھنڈی کے کافی تعداد میں لوگ ممبر اسمبلی کی رہائش گاہ پر پہنچے اور واقعہ کی سخت الفاظ میں مذمت کی۔گزشتہ روز گاؤں رنکھنڈی میں شہید فوجی ارون کے خاندان سے اظہار ہمدری کرنے پہنچے بی جے پی کے علاقائی ممبر اسمبلی کنور برجیش سنگھ کی مخالفت کرتے ہوئے کچھ لوگوں نے ان کے ساتھ بدسلوکی اور گالی گلوچ کی تھی۔ سوشل میڈیا پروائرل ویڈیو سے یہ معاملہ پورے علاقہ میں پھیل گیا۔ اسی معاملے میں گزشتہ دیر شام گاؤں رنکھنڈی کے کافی تعداد میں لوگ گاؤں جڑودہ جٹ واقع ممبر اسمبلی برجیش سنگھ کے گھر پہنچے اور ان سے ملاقات کی۔گاؤں کے وکاس پنڈیر، بجندر کمار، دنیش، سندیپ کمار، مانگے رام وغیرہ نے کہا کہ جن شرارتی عناصر نے ممبر اسمبلی کے ساتھ نازیبا سلوک کیا ہے ان کے خلاف پولیس انتظامیہ سخت کارروائی کرے۔ گاؤں کے اندر کسی کو بھی ماحول خراب نہیںکرنے دیا جائیگا،گاؤں والوں نے کہاکہ رنکھنڈی اور جڑودہ جٹ گاؤں کا پرانا رشتہ ہے، دونوں گاؤں کے لوگ ایک تھے اور ایک ہیں۔ اس دوران موجود کئی دیہی لوگوں نے کہا کہ جلد ہی گاؤں رنکھنڈی میں علاقائی ممبر اسمبلی کے لئے اعزازی تقریب کا انعقاد کیاجائیگا۔اس موقع پر نکی رانا، آکاش رانا، شیش پال سنگھ، دیپک کمار، وپن شرما، منوج رانا، راہل، دیشپال، جتیندر سنگھ، سنجے کمار، شیو کمار،شیو کمار وغیرہ موجود رہے۔ بتا دیں کہ ہفتہ کو گاؤں رنکھنڈی میں ممبر اسمبلی کی مخالفت کے بعد ان کے حامیوں کے ساتھ ہوئی مارپیٹ کے معاملے میں اتوار کو کوتوالی پولیس نے تحریر کی بنیاد پر چھ نامزد اور نامعلوم افراد کے خلاف مختلف سنگین دفعات میں مقدمہ درج کیا تھا۔اب اس معاملہ میں سمجھوتہ کی کوششیں شروع ہوگئی ہیں،گزشتہ رکن اسمبلی کے گھر رنکھنڈی کے لوگوںکاپہنچنا بھی اسی کے تحت بتایا جارہاہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker