ہندوستان

’میڈیا نے میرے بیان کو غلط منسوب کیا ہے ‘

ثابت کردے کہ میں نے نام لے کر کسی کوبدنام کیاہے تومیںچنائوسے ہٹ جائوںگا: اعظم خان

رام پور۔ ۱۵؍اپریل(صدام حسین فیضی)رام پورکی تحصیل شاہ آبادمیںسابق وزیراعلیٰ اکھلیش یادوکی موجودگی میںسابق وزیرمحمداعظم خاں کے ذریعہ دئے گئے بیان ’’جس کوہم انگلی پکڑکررام پورلائے،آپ نے10سال جسے اپنانمائندہ بنایااس کی اصلیت سمجھنے میںآپ کو 17 برس لگ گئے لیکن میںنے 17 دن میںانہیںپہچان لیاکہ ان کے نیچے کاانڈرویئرخاکی رنگ کاہے‘‘بندجملے کوبھارتیہ جنتاپارٹی کی امیدوار جیہ پردانہاٹہ کی طرف میڈیاکے ذریعہ منسوب کردیاگیاہے۔ اس بیان میںاعظم خاںجیہ پرداکانام نہیںلے رہے ہیںمگران کاکہناہے کہ میںنے جب کسی کانام نہیںلیاتومیڈیانے کیوںاس کوتوڑمروڑکرپیش کیاہے۔ میڈیاسے برافروختگی ظاہرکرتے ہوئے ہمارے نمائندہ سے سابق وزیرمحمداعظم خاںنے تاسفناک لب ولہجہ میںکہاہے کہ میںلوک سبھاکاچنائومحض مدعوںپرلڑرہاہوں۔آرایس ایس اوربھارتیہ جنتا پارٹی کے خلا ف لڑرہاہوں۔زندگی بھرمیںنے کافی محنت کی ہے۔ میںنے کسی کانام نہیںلیا،نہ میںنے کسی کی خوبی بیان کی اورنہ برائی بتائی ۔انہوںنے راجیہ سبھارکن ٹھاکرامرسنگھ کانام لئے بغیرکہاکہ میںنے ایک شخص جودہلی میںبیمارہے جس نے مجھے کہاکہ ڈیڑھ سورائیفل لیکر میںآیاتھااگرمیںاسے ملتاتوچھلنی کردیتا۔ میںنے اس کے تعلق سے یہ کہاکہ لوگوںنے اسے پہچانے میںکافی تاخیرکردی۔میرے نیتائوں سے بھی غلطی ہوئی تب معلوم ہواکہ آرایس ایس کانیکرتھااس کے جسم پر۔اعظم نے واضح کیاہے کہ نیکرتومردپہنتے ہیںاورمیںپہلے سے بہت ڈراہواہوںکہ بڑی بڑی شخصیات میرے مقابلے میںہیں۔بڑے شان وشوکت والے لوگ ہیں،میںبہت غریب انسان ہوں۔میںپہلے ہی کہ چکاہوںکہ جھوٹ کافی دن کام نہیںکرتاہے میں9بارایم ایل اے،راجیہ سبھااور4بارکاوزیرہوں۔میںجانتاہوںکہ مجھے کیاکہنا چاہئے۔ مجھے افسوس ہے کہ میڈیاجومجھے پسندنہیںکرتااورمیںبھی میڈیاکوپسندنہیںکرتاکیونکہ میڈیانے بہت بڑانقصان کیاہے۔ آج کے حالات میڈیانے بربادی کے کاگارپرلاکرکھڑے کردیئے ہیں۔ اپنی ذمہ داری کونبھانے کے بجائے کھلواڑکیاہے ۔میڈیاکی ناراضگی ہے مجھے بے عزت کرنانقصان پہنچانا۔ میرامالک میرے ساتھ ہے میراچنائوبہت اچھاہے۔دعویٰ کیاہے کہ اگرکہیںکوئی ثابت کردے کہ میں نے کسی کانام لیاہے اورنام لیکرکسی کوبدنام کیاہے تومیںچنائوسے ہٹ جائوںگا۔مرادآبادمنڈل میںوزیراعظم نریندرمودی کے ذریعہ عوامی جلسے میںمحمدعلی جوہریونیورسٹی کونشانہ بنانے پراعظم خاںنے کہاہے کہ مجھے معلوم ہواہے ان کے بیان کے بارے میں۔بہترتھاکہ وزیراعظم جس جہازسے تھے اس سے بم باٹ کرتے ہوئے چلے جاتے ،اسے ختم کردیتے ،پریشان توبہت کررہے ہیں،سب کی حصہ داری کانعرہ دینے والے میرے بچوںکوتعلیم حاصل کرنے نہیںدیتے۔ ہم نے تعلیم کامندربنایاہے۔تعلیم کے مندرکوتوڑنے والے اوربچوںکوپیاسہ چھوڑ نے والے کیسے یہ کہ سکتے ہیںکہ وہ اتنے بڑے ملک کی باگ دوڑسنبھالنے کے لاحق ہیں۔یوگی آدتیہ ناتھ کے بیان جورام شری کرشن بجرنگ بلی میںبھروسہ نہیںکرتے ۔۔۔پرکہاہے کہ ہم صرف ایک اللہ کی عبادت کرتے ہیںمگرانہیںمہاپرش مانتے ہیں،وہ ہمارے لئے قابل عقیدت واحترام ہیں،ہنومان جی بھی محترم ہیں۔اسی لئے جب یوگی نے ہنومان جی کامزاق بنایااوردلت بتایا،ان کی توہین کی۔کہاکہ ہم تو47میںپاکستان چلے گئے ہوتے۔مگراس ملک میںحصہ داری ہماری ہے۔یہ واضح کردیاجائے کہ سماجوادی نیتااعظم خاںکے ذریعہ بھاجپاامیدوارجیہ پردہ کے تعلق سے نازیباتبصرہ کرنے کے عوض میںشاہ آبادمیںآیف آئی آردرج کردی گئی ہے۔کپتان پولیس شیوہری مینانے بتایاکہ گٹھ بندھن امیدوارکے ذریعہ نازیباتبصرہ کرنے پرآئی پی ایس کی دفعہ509,125کے تحت مقدمہ درج کر لیا ہے ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker