ہندوستان

موجودہ سیاست پر زعفرانی تسلط ملک کو تباہی کی طرف لے جارہا ہے۔ ایم کے فیضی

نئی دہلی۔( پریس ریلیز)۔سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا (SDPI) کی جانب سے کل 16مئی 2019کو کمیونٹی سینٹر حضرت نظام الدین، نئی دہلی میں دعوت افطار کا اہتمام کیا گیا۔ دعوت افطار میں ملک بھرسے سرکردہ سیاسی و سماجی شخصیات نے شرکت کی۔ ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی، قومی نائب صدور دہلان باقوی، اڈوکیٹ شرف الدین احمد، آر پی پانڈیا،قومی جنرل سکریٹریان عبدالمجید، محمد شفیع، قومی سکریڑیان ڈاکٹر تسلیم احمد رحمانی، ایس ڈی پی آئی دہلی صوبائی کنوینر ڈاکٹر نظام الدین خان، قومی ورکنگ کمیٹی رکن عبدا لستار، محترمہ شاہین کوثر اور صوبہ دہلی کے عہدیداران اور کارکنان شریک رہے۔ دعوت افطار میں مہمانان خصوصی کے طور پر معروف آریا سماج رہنما سوامی اگنی ویش، سابق مرکزی وزیر وسابق رکن پارلیمان اسلم شیر خان، سابق سفیر وسابق رکن پارلیمان ایم افضل، صحافی شاہد صدیقی، راشٹریہ سہار ا گروپ ایڈیٹرمشرف عالم ذوقی،سی پی ایم پولیٹ بیوریو ممبرسنیت چوپڑا،ہندو مہا سبھا ( مالویا) جنرل سکریٹری اندر ا تیواری،بہوجن سمان پارٹی لیڈر اشوک بھارتی،کارکن ڈی سی کپل،آرٹ آف لیونگ سے گوتم ویج،مسلم پرسنل لاء بورڈ رکن کما ل فاروقی، اڈوکیٹ محمود پراچہ سکریٹری جماعت اسلامی ہند، ملک موتصم خان ۔ مجتبی فاروق آل انڈیا مسلم مجلس مشاورت جنرل سکریٹری، عبدلحمید نعمانی،مفتی عطاء الرحمن قاسمی،بی ایس پی دہلی امیدوار شاہد علی اڈوکیٹ، آل انڈیا شیعہ علماء کونسل سکریٹری مولانا جلال حیدر، جمیعتہ علماء ہند صوبہ دہلی سکریٹری جاوید قاسمی، جے این یو اردو ایچ او ڈی پروفیسر خواجہ اکرام ، غالب اکیڈمی سکریٹری ڈاکٹر عقیل احمد، غالب انسٹی ٹیوٹ ڈائرکٹر حید ررضا اور ممتاز وکلاء اور متعدد میڈیا نمائندے شریک رہے۔ ایس ڈی پی آئی قومی سکریٹری ڈاکٹر تسلیم احمد رحمانی نے مہمانوں کا استقبال کرتے ہوئے اپنی تقریر میں کہا کہ ایس ڈی پی آئی ملک کی ثقافتی سیاست اور باہمی اتحاد کی بحالی کیلئے سر گرم عمل ہے۔ایس ڈی پی آئی کا ہدف خوف سے آزادی اور بھوک سے آزادی ہے۔ ہمیں آج اس بات کا فخر ہے کہ کم از کم مختلف گروپوں کے درمیان اتحاد کیلئے ایس ڈی پی آئی ایک پلیٹ فارم فراہم کرنے میں کامیاب ہوئی ہے۔ ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے اپنے صدارتی تقریر میں کہا کہ
موجود ہ سیاسی صورتحال میں ایک متبادل سیاست کی بہت ضرورت ہے اور ایس ڈی پی آئی اس متبادل سیاسی پلیٹ فارم فراہم کرنے پر پابند ہے۔ ایم کے فیضی نے اس بات کی طرف خصوصی نشاندہی کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ سیاست پر زعفرانی تسلط ملک کو تباہی کی طرف دھکیل رہا ہے۔ لہذا تمام قوم پرست اور وطن پرست قوتوں کو فرقہ وارانہ طاقتوں پر لگام لگانے اور ملک اور ملک کے آئین کو بچانے کیلئے آگے آنے کی ضرورت ہے۔اس موقع پر سوامی اگنی ویش اور ایم افضل نے بھی شرکا ء سے خطاب کیا۔ایس ڈی پی آئی قومی نائب صدر اڈوکیٹ شرف الدین احمد نے نظامت کے فرائض انجام دئیے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker