ہندوستان

”شاہین ادارہ جات بیدر“میں ”شاہین کیمپس ہاسپٹل“کا قیام عمل میں آیا

ہاسپٹل مکمل طورپر کارپوریٹ ہاسپٹل کی طرز پر طلباء کا علاج کرے گا‘اور یہاں 24X7اوقات میں بر وقت طبی مفت خدمات فراہم کی جائیں گی۔ڈاکٹرعبدالقدیر
بیدر:18/مئی(بی این ایس)
جنوبی ہندوستان کی ریاستِ کرناٹک کے شہربیدر کا معروف تعلیمی ادارہ ”شاہین ادارہ جات بیدر“میں ”شاہین کیمپس ہاسپٹل“کا قیام عمل میں آیا ہے۔شاہین ادارہ جات کے چیرمن ڈاکٹر عبدالقدیر نے کہا کہ شاہین ادارہ جات بیدر میں ملک کی تقریبا ریاستوں‘اور بیرون ممالک سے طلباء حصول تعلیم کیلئے داخلہ لیتے ہیں۔ان کی تعلیم کے ساتھ ساتھ ہمیں ان کی صحت پر بھی خصوصی توجہ دینا ضروری ہے۔انھو ں نے کہا کہ شاہین ادارہ جات میں زیر ِ تعلیم طلباء کی تعداد4500سے زائد ہے‘امسال 6ہزار بھی ہوسکتی ہے۔تعلیم کے زیر دوراں موسمی تغیر اور کسی وجہ سے طلباء بیمار بھی ہوتے ہیں‘بیماری کا اثر طلباء کی تعلیم پر نہ ہو اسی فکر کو لے کر ہم نے اپنے تعلیمی ادارہ جات کے طلباء اپنی بہتر صحت کے ساتھ حصول تعلیم میں مصروف رہیں۔اسی مقصد کے تحت ہم نے شاہین ادارہ جات بیدر میں ”شاہین کیمپس ہاسپٹل“ کا قیام عمل میں لایا ہے۔یہ ہاسپٹل مکمل طورپر کارپوریٹ ہاسپٹل کی طرز پر طلباء کا علاج کرے گا۔اور یہاں 24X7اوقات میں بر وقت طبی خدمات فراہم کی جائیں گی۔اور کسی بھی ایمرجنسی صورتحال پر ہمارے ڈاکٹر س کی ٹیم اپنے مکمل تجربہ کے ساتھ کام کرے گی۔آج اس ہاسپٹل کا افتتاح ڈاکٹر شریف ایم ڈی (پیاتھولجسٹ)کے ہاتھوں عمل میں آیا۔اس پروگرام میں مہمانانِ خصوصی کی حیثیت سے شاہین ادارہ جات سے فارغ التحصیل ڈاکٹر طلباء جن میں ڈاکٹر ابرار احمد ایم ڈی(ریڈیا لوجسٹ)‘ڈاکٹر سید اکبر ایم ڈی جنرل میڈیسن‘ڈاکٹر فاضل ایم ڈی جنرل میڈیسن‘ڈاکٹر توفیق‘ڈاکٹر ناگراج ایم ڈی(Pediatrician)اور ڈاکٹر شکیب Anaesthetist نے شرکت کی۔اس موقع پر صحافیوں سے بات کرتے ہوئے ڈاکٹر جمیل نے کہا کہ مذکورہ بالا ہاسپٹل کی تمام ذمہ داری اور نگرانی میں کرتا رہوں گا۔میں بحیثیت جنرل فزیشن فُل ٹائم یہاں وقت دیتے ہوئے خدمات انجام دے رہا ہوں۔میں اس سے قبل بھی مہاراشٹرا اور کرناٹک کے گورنمنٹ میڈیکل ہاسپٹل میں ٹیچنگ کا تجربہ رکھتا ہوں۔میں مہاراشٹرا میں 2سال اور بیدر میڈیکل کالج ہاسپٹل میں ساڑھے چارسال خدمات انجام دیں ہیں۔ا سکے علاوہ میں سعودی عربیہ میں منسٹری آف ہیلتھ کے ایمرجنسی شعبہ میں 6سال خدمات انجام دیں ہیں اسی تجربہ کے بنا پر میں یہاں طلباء کی بہتر سے بہتر صحت کیلئے اپنی کوششیں جاری رکھوں گا۔شاہین کیمپس ہاسپٹل میں کارپوریٹ طرز کے ہاسپٹل کی طرح آئی سی یو کا نظم رہے گا‘جہاں آکسیجن سپلائی‘وائٹل مشین‘ای سی جی مشین‘و دیگر جدید طبی آلات سے لیس اس ہاسپٹل میں ریڈیو انویسٹی گیشن‘پیاتھوں لوجیکل انویسٹی گیشن‘جدید لیبارٹری‘اور ادویات مرکز کے علاوہ دیگر تمام طبی سہولیات فراہم کئے جائیں گے‘ اور ساتھ ہی ساتھ ماہر طبی عملہ بر وقت اپنی خدمات انجام دے گا۔طلباء کے والدین جو اپنے بچوں کو اپنے سے دور حصولِ تعلیم کیلئے داخلہ کرواتے ہیں اور حفاظت و سلامتی کیلئے فکر مند ہونا والدین کی فطری بات ہے۔طلباء کے دوران علاج ان کے والدین کوان کے مرض اور ادویات سے متعلق تفصیلات دیتے ہوئے انھیں واقف کروایا جائے گا۔تاکہ طلباء کے والدین فکر مند نہ ہو۔اس موقع پر جناب عبدالحسیب معتمد شاہین ادارہ جات بیدر‘ شاہین ادارہ جات کی صدر معلمہ محترمہ مہر سُلطانہ و دیگر معزز شخصیات موجود تھے۔٭٭٭

Tags

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker