ہندوستان

مودی سرکار میں کسی بے گناہ کو نہیں پکڑا گیا

کانگریس کی دس سالہ حکومت اور مودی سرکار پانچ سال کاموازنہ کریں تو دونوں میں زمیں آسمان کا فرق ہے ۔ مسلمانوں کیلئے یہ پانچ سال حد درجہ بہتر رہا، دہشت گردی کے نام پرکسی بے گناہ کو نہیں پکڑا گیا:عرفان احمد
نئی دہلی :25؍مئی (بی این ایس)
مسلمان عزم وحوصلہ رکھیں۔ اس سے بھی زیادہ سخت حالات کا ہم نے سامنا کیاہے۔ پانچ سال ہم نے گزارے ہیں یہ پانچ سال بھی گز ر جائیں گے۔ ہمارے بزرگوں نے بہت سوچ سمجھ کر اس ملک میں رہنے کا فیصلہ کیاتھا۔مودی سرکار دوبارہ بننے کے بعد اس طرح کی باتیں کی جانے لگی ہیں۔یہ جملے ،تجزیے اور پیغامات نفسیاتی طور پر مسلمانوں کو حوصلہ دینے کے بجائے خوف زدہ کررہے ہیں۔ ان کے ذہنوں کو مزید پراگندہ کرنے اور مخصوص شخصیات اور پارٹیوں سے متنفرکرنے کی کوشش ہے جس سے مسلمانوں کا صرف نقصان ہوگا۔یہ بات بی جے پی اقلیتی مورچہ کے نائب صدر عرفان احمد نے کہی ۔ ہندوستان ایک جمہوری اور سیکولر ملک ہے۔ کوئی بھی پارٹی اقتدار میں آسکتی ہے۔ کسی کی بھی حکومت بن سکتی ہے۔اس طرح کی باتیں غیر جمہوری ہیں اورہندستانی معاشرے میں بگاڑ کا سبب ہیں۔جس کانگریس اور مہاملاوٹیوں کی طرف داری کی بات ہورہی ہے اگر کانگریس کے گزشتہ ستر سالہ دور حکومت خاص طور پر 2004 سے 2014 تک کی دس سالہ حکومت اور مودی سرکار کے پانچ سال موازنہ کریں تو دونوں میں زمیں آسمان کا فرق ہے ۔خاص کر مسلمانوں کیلئے یہ پانچ سال حد درجہ بہتر رہا ہے ۔ یوپی اے میں دہشت گردی کے نام پر ہزاروں بے گناہ اور معصوم مسلم نوجوانوں کو گرفتارکرکے جیلوں میں ڈالا گیا۔ان کے دس دس- پندرہ پندرہ سال برباد کر دئیے گئے ،مسلم بچوں کی زندگی تباہ ہوگئی ۔گزشتہ پانچ سالوں میں مودی سرکار میں کسی بے گناہ کو نہیں پکڑا گیا۔ہزاروں مسلم بچوں کو دستکاری اور ہنرہاٹ کے ذریعہ آگے بڑھایا گیا۔ہائر ایجوکیشن کیلئے اسکالر شپ دی گئی ۔ حکومت کے کئی شعبوں میں نوکریاں دی گئیں۔مسلم بچیوںکو وزارت اقلیت کی جانب سے اسکالر شپ مہیا کرائی گئی ۔پانچ سال میں ذات برادری، کنبہ پروری جیسی سیاست کا خاتمہ ہوا۔ایک راشٹرایک نیشن کی بنیاد پڑی ۔مسلمانوں کیلئے حج کوٹے کو جو کہ یو پی اے سرکار میں کافی کم تھا بڑھا کر دولاکھ کردیا گیا۔ عرفان احمد نے لوک سبھا انتخابات میں اتنی بڑی جیت کیلئے وزیراعظم نریندر مودی کو مبارکباد دی ۔اس کے علاوہ دوبارہ مودی سرکاربننے پر ممبئی کی ماہم درگاہ پرچاد راور گلپوشی کرکے عرفان احمد نے عقیدت کا نذرانہ پیش کیا۔

Tags

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker