Baseerat Online News Portal

یوم آزادی

 

ندیم احمد انصاری عاملؔ

 

یوم آزادی جو آیا

مجھ کو پھر یاد آ گئی

میرا وطن پیارا وطن

تھا ایک مدت تیش میں

 

اس غلامی سے نکلنے

کی وجہ ایک یہ بھی تھی

رہتے تھے ہندو مسلماں

مل کے سنگ اس دیش میں

 

پھر کیا ہوا اس دیش کو

کس کی نظر اس کو لگی

رہنے کو رہتے ہیں یہاں

لیکن ہیں اب ایک طیش میں

 

کس نے تمھیں لڑوا دیا

امن و سکوں غارت کیا

کرسی بچا لی آپ کی

دنگا پڑا اوشیش میں

 

دھرتی ہے تلسی کی یہی

اور ہے زمیں غالب کی بھی

پر آ گیا ہرنے کو راون

پھر ہرن کے ویش میں

 

You might also like