اخبارجہاں

اقوام متحدہ کی ہائی کمشنر کا جموں و کشمیر کی موجودہ صورتحال پر اظہارتشویش، وادی میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں ، مسلسل پابندیوں، لاک ڈاؤن اور کریک ڈاؤن کے خاتمے کا مطالبہ

جینوا۔۹؍ستمبر: ۔اقوام متحدہ کی ہائی کمشنر نے جموں و کشمیر کی موجودہ صورتحال پر تشویش کا اظہارکرتے ہوئے وادی میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں ، مسلسل پابندیوں، لاک ڈائون اور افواج کی جانب سے جاری کریک ڈائون کے خاتمے کا مطالبہ کیا ہے۔پیر کو اقوام متحدہ کے کمشنر برائے انسانی حقوق کے زیراہتمام جنیوا میں انسانی حقوق کونسل کا ۴۲؍واں اجلاس ہوا، اس موقع پر اجلاس کے شرکاء نے کئی اہم نکات پر تبادلہ خیال کیا ۔ اقوام متحدہ کی ہائی کمشنر نے جموں و کشمیر میں کشمیریوں کے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر گہری تشویش کا اظہار کیا۔اس کے علاوہ مواصلات اور انٹرنیٹ ، پرامن اجتماع پر پابندی اور مقامی سیاسی قیادت سمیت عام شہریوں کی گرفتاریوں پر بھی تشویش کا اظہار کیا ہے۔اطلاعات کے مطابق اقوام متحدہ میں انسانی حقوق کے عالمی سیشن میں کشمیر کا ذکر اس وقت ہوا جب ہائی کمشنر برائے انسانی حقوق نے حکومت ہند سے یہ مطالبہ کیا کہ کشمیر میں کرفیو اور بندشوں کے سلسلے میں میں نرمی لائے۔انسانی حقوق کی کونسل کے ۴۲ویں عالمی سیشن کے دوران کشمیر پر بات کرتے ہوئے اقوام متحدہ کی ہائی کمشنر برائے انسانی حقوق میچیل بیچیلیٹ نے کہا ہے کہ ‘میرے دفتر کو لائن آف کنٹرول کے دونوں اطراف پر انسانی حقوق سے متعلق صورتحال پر معلومات ملتی رہتی ہیں۔ میچیل بیچیلیٹ نے پاکستان اور ہندوستان دونوں کی حکومتوں پر انسانی حقوق کے تحفظ کے لیے زور دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ‘میں نے ہندوستان سے مطالبہ کیا ہے کہ کشمیر میں موجودہ لاک ڈاؤن اور کرفیو میں نرمی لائی جائے تاکہ لوگوں کو بنیادی سہولتیں مل سکیں۔انہوں نے کہا کہ ‘مجھے حکومت ہند کے حالیہ اقدامات پر شدید تشویش ہے جس سے کشمیریوں کے انسانی حقوق متاثر ہوئے ہیں، جیسے کہ انٹرنیٹ، مواصلاتی نظام اور لوگوں کے پرامن طریقے سے اکٹھے ہونے پر پابندی عائد ہے اور مقامی سیاسی رہنماؤں اور کارکنوں کی گرفتاریاں ہوئی ہیں۔انہوں نے کشمیر میں زیر حراست لوگوں کو اپنے دفاع کا حق دینے کا مطالبہ بھی کیا ہے ، انہوں نے کہا کہ یہ اہم ہے کہ ایسی فیصلہ سازی میں کشمیریوں کی رائے لی جائے جس سے ان کا مستقبل جڑا ہے۔انہوں نے کہاکہ میں ہندوستان اور پاکستان کی حکومتوں سے مطالبہ کرتی ہوں کہ وہ انسانی حقوق کا احترام اور تحفظ کریں انہوں نے کہا کہ میں نے خصوصی طور پر ہندوستان سے اپیل کی ہے کہ وہ موجودہ لاک ڈاؤن یا کرفیو کو کم کریںـ‘‘۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker