Baseerat Online News Portal

مہاراشٹر میں صدر راج کی گورنر نے سفارش کی، این سی پی کے جواب سے پہلے اقدام، وزیراعظم کی کابینہ میٹنگ میں فیصلہ

 

شیوسینا نے گورنر کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کیا
نئی دہلی۔ ۱۲؍نومبر: این سی پی، شیوسینا، کانگریس کی سرکار بننے کے مکمل امکانات کے درمیان اچانک گورنر نے صدرراج کی سفارش کردی جسے کابینہ نے منظوری بھی دے دی ہے۔ وزیر اعظم نریندرمودی کی صدارت میں آج کیبنٹ کی میٹنگ طلب کی گئی تھی جہاں یہ فیصلہ لیاگیا ۔ کل شیوسینا نے جب دودن کاوقت مانگاتو گورنر نے انکار کردیا پھراین سی پی کو دعوت دی لیکن اس سے قبل کہ، این سی پی حتمی فیصلہ کرتی اچانک صدرراج کی سفارش کردی گئی، شیوسینا نے اسے غیر آئینی قدم بتاتے ہوئے کپل سبل کے مشورے پر سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا ہے

نیوز ایجنسی پی ٹی آئی نے ذرائع کے حوالے سے یہ اطلاع دی ہے۔ ذرائع کے مطابق مودی کابینہ نے صدر رام ناتھ کووند کے پاس اس پر دستخط کےلیے بھیج دیا ہے۔ کیبنٹ کی میٹنگ ایسے وقت پر بلائی گئی تھی جب مہاراشٹر میں گزشتہ مہینے ودھان سبھا کےلیے ہوئے چنائو کے بعد اب تک کوئی پارٹی حکومت نہیں بنا پائی ہے اوراس کی وجہ سے ریاست میں سیاسی بحران قائم رہا، کابینہ کی میٹنگ کے بعد وزیر اعظم برازیل روانہ ہوگئے۔ مہاراشٹر کی ۲۸۸؍ اراکین اسمبلی والی ودھان سبھا میں شیوسیناکے پاس ۵۶ سیٹیں ہیں جبکہ راشٹروادی کانگریس اورکانگریس کے پا س ۵۴ اور ۴۴ سیٹیں ہیں ریاست میں حکومت سازی کےلیے کم از کم ۱۴۵ اراکین اسمبلی کی ضرورت ہوتی ہے ۔

You might also like