ہندوستان

اے ایم یو میں سوسائٹی آف پلاسٹک سرجنس

آف اترپردیش اینڈ اتراکھنڈ کی سالانہ کانفرنس کا آغاز

علی گڑھ، 15؍نومبر:جواہر لعل نہرو میڈیکل کالج (جے این ایم سی)، علی گڑھ مسلم یونیورسٹی( اے ایم یو) کے پلاسٹک سرجری شعبہ کی جانب سے ایسوسی ایشن آف پلاسٹک سرجنس آف انڈیا کے اشتراک سے سوسائٹی آف پلاسٹک سرجنس آف اترپردیش اینڈ اتراکھنڈ کی دو روزہ سالانہ کانفرنس کا انعقاد کیا گیا، جس کا افتتاحی اجلاس جمعہ کو جے این ایم سی آڈیٹوریم میں منعقد ہوا۔ اجلاس کے مہمان خصوصی اور اے ایم یو کے پرو وائس چانسلر پروفیسر اختر حسیب نے اس موقع پر کہا کہ کانفرنس میں ملک کے نامور پلاسٹک سرجن جمع ہوئے ہیں جن سے نوجوان ریزیڈنٹ سرجنوں کو بہت کچھ سیکھنے کو ملے گا اور پلاسٹک سرجری کے شعبہ میں ہونے والے نئے تجربات اور نئی تحقیق سے انھیں واقفیت حاصل ہوگی۔ اجلاس کی مہمان اعزازی اور اسمائل ٹرین پروجیکٹ امریکہ کی ایشیا خطہ کی ڈائرکٹر محترمہ ممتا کیرول نے اس موقع پر کہاکہ پیدائش کے وقت کٹے ہوئے ہونٹ کے ساتھ پیدا ہونے والے بچوں کو معقول علاج فراہم کرنا ہماری ذمہ داری ہے۔ انھوں نے کہا کہ خاص طور سے غریب کنبوں سے تعلق رکھنے والے بچوں کو اسمائل پروجیکٹ کے تحت علاج فراہم کیا جاتا ہے اور اس سلسلہ میں بیداری پیدا کی جاتی ہے۔ جے این ایم سی کے سی ایم ایس اور پرنسپل پروفیسر شاہد علی صدیقی نے کہاکہ نئی ٹکنالوجی اور سہولیات سے کاسمیٹک اور زیبائشی سرجری رفتہ رفتہ آسان اور محفوظ ہوتی جارہی ہے۔ فیکلٹی آف میڈیسن کے قائم مقام ڈین پروفیسر راکیش بھارگو نے کہا کہ یہ کانفرنس اترپردیش، اتراکھنڈ اور متصل ریاستوں کے پلاسٹک سرجنوں کے لئے ایک سنہرا موقع ہے جنھیں ایک دوسرے سے سیکھنے کا موقع ملے گا۔ کانفرنس کے آرگنائزنگ چیئرمین پروفیسر عمران احمد نے کہا کہ کاسمیٹک سرجری کی ضرورت دن بدن بڑھ رہی ہے ، چنانچہ آج کے سرجنوں کو پلاسٹک سرجری کے سبھی شعبوں میں ہونے والی پیش رفت کی جانکاری ہونا ضروری ہے۔ سوسائٹی آف پلاسٹک سرجنس آف اترپردیش اینڈ اتراکھنڈ کے سکریٹری ڈاکٹر آدرش کمار نے کہا کہ یہ دیکھ کر بہت مسرت ہورہی ہے کہ جے این ایم سی میں پلاسٹک سرجری کے شعبہ نے کافی ترقی کی ہے اور اس کانفرنس سے نوجوان ڈاکٹروں کو بہت فائدہ ہوگا۔ اس موقع پر کنگ جارج میڈیکل یونیورسٹی، لکھنؤ کے پلاسٹک سرجری شعبہ کے سربراہ پروفیسر ارون کمار سنگھ نے پروفیسر آر این شرما یادگاری خطبہ پیش کیا۔ اس کے علاوہ اسمائل ٹرین پروجیکٹ کے ڈائرکٹر ڈاکٹر آصف مسعود نے پروفیسر ایم ایچ خان یادگاری خطبہ اور ڈاکٹر ہری وینکٹا رمانی (سینئر کنسلٹنٹ، گنگا ہاسپٹل، کوئمبٹور) نے پروفیسر ایس کے بھٹناگر یادگاری خطبہ پیش کیا۔ اجلاس کے دوران پروفیسر ایف ایم ترپاٹھی، ڈاکٹر ایس پی بجاج اور پروفیسر ایل ایم بیریئر کو لائف ٹائم اچیومنٹ ایوارڈ سے نوازا گیا۔ کانفرنس کے آرگنائزنگ سکریٹری پروفیسر اے ایچ خاں نے اظہار تشکر کیا۔ نظامت کے فرائض مشترکہ طور سے ڈاکٹر تُشار پٹیل اور ڈاکٹر ادیتی شرما نے انجام دئے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker