ہندوستان

آج دارالعلوم ندوۃ العلماء لکھنؤ میں مسلم پرسنل لاء بورڈ کے عاملہ کی میٹنگ، بابری مسجد معاملہ کے فریق اقبال انصاری ایکشن کمیٹی کی میٹنگ میں شریک نہیں ہوئے

 

لکھنو۔ ۱۶؍نومبر: آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کے عاملہ کی میٹنگ کل اتوار ۱۷؍ نومبر کو دارالعلوم ندوۃ العلماء میں منعقد ہوگی، اس میٹنگ میں ملک بھر سے بورڈ کے ایکٹیو اراکین شامل ہونے کےلیے وہاں پہنچ چکے ہیں صبح ساڑھے گیارہ بجے سے میٹنگ شروع ہوگی۔ ایودھیا فیصلے کے بعد بورڈ کی اس میٹنگ کو کافی اہم تصور کیاجارہا ہے، اس میٹنگ میں کیس کو لے کر آگے کی حکمت عملی پر گفتگو ہوگی۔ بورڈ اس بات پر بھی گفتگو کرے گا کہ ریویو پٹیشن دائر کرنا ہے یا نہیں۔ میٹنگ میں مجلس اتحادالمسلمین کے صدر اسدالدین اویسی بھی حیدرآباد سے شامل ہونے کےلیے روانہ ہوچکے ہیں۔ ادھر مسلم پرسنل لا بورڈ کی میٹنگ سے قبل آج سنیچر کو مسلم فریقوں کی میٹنگ لکھنو میں منعقد ہوئی بورڈ کے کنوینر ظفریاب جیلانی نے اس میٹنگ میں ایودھیا کیس سے منسلک سبھی فریقوں کو ندوہ کالج میں ملاقات کےلیے مدعو کیا تھا جہاں انہوں نے سبھی سے ملاقات کی۔ اس میٹنگ میں بابری مسجد کے فریق اقبال انصاری نے جانے سے انکار کردیا تھا انہوں نے کہاکہ ’’ ہم چاہتے ہیں کہ پورے ملک میں امن وشانتی رہے۔ ہم اس کو آگے نہیں بڑھاناچاہتے ہیں، آج کمیٹی کی بیٹھک بلائی گئی تھی ، ہم اپنے گھر پر ہیں، کمیٹی میں پانچ فریق ہیں، میں اپنا ذمہ دار ہوں، میں وہاں نہیں گیا، کورٹ نے جو فیصلہ کیا ہے سبھی اسے تسلیم کرلیں، کوئی ایسا کام نہ کریں جس سے ملک کے امن وامان نقصان پہنچے، میں ذمہ داروں ملک میں امن وشانتی کا پیغام دیتا رہوں گا‘‘۔ ادھر سنی وقف بورڈ کے چیئرمین زفر فاروقی نے کہا کہ ۲۶؍نومبر کو ہونے والی بورڈ کی میٹنگ میں سپریم کورٹ کے فیصلے کو قانونی پہلوئوں پر گفتگو کی جائے گی۔ فاروقی کے مطابق سپریم کورٹ کا فیصلہ ۱۰۰۰ صفحات سے زائد کا ہے اسے ابھی بھی پورا پڑھا نہیں جاسکا ہے، حالانکہ انہوں نے کہاکہ ایک بار پھر کورٹ کے فیصلے کے خلاف رویو داخل کرنے کے امکانان سے انکار کیا۔ انہو ںنے کہاکہ آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ مسلمانوں کے سبھی طبقوں کی نمائندگی کرتا ہے، اس معاملے میں مسلم پرسنل لا بورڈ کی جانب سے آنے والی رائے کو بھی اہمیت دی جائے گی، وقف بورڈ سبھی لوگوں کی رائے کو توجہ دے رہا ہے، ابھی جمعیۃ علمائے ہند کے قومی صدر مولانا سید ارشد مدنی نے اپنی رائے دی ہے کہ بورڈ کو پانچ ایکڑ زمین نہیں لینی چاہئے وہیں کئی لوگوں کی آراء آرہی ہیں کہ وقف بورڈ کو زمین لے لینی چاہئے اس پر مسجد کے ساتھ ایک تعلیمی ادارہ بھی قائم کرناچاہئے۔ زفر فاروقی نے کہاکہ سبھی لوگوں کی رائے بورڈ کی میٹنگ میں رکھی جائے گی اس کے قانونی پہلوؤں پر گفتگو کرنے کے بعد ہی بورڈ کے اراکین اس معاملے میں فیصلہ لیں گے۔ واضح رہے کہ آج کی ایکشن کمیٹی کی میٹنگ میں اقبال انصاری نے شرکت نہیں کی وہیں مسلم فریق حاجی محبوب کی طبیعت ناساز ہونے کی وجہ سے وہ نہیں پہنچ سکے تھے لیکن ۔ انہو ںنے اپنے نمائندے کو دارالعلوم ندوۃ العلما میں بھیجا تھا۔ جمعیۃ علمائے ہند کی جانب سے محفوظ الرحمان ندوہ میں موجود رہے۔ مرحوم حاجی عبدالاحد کے صاحبزادے بھی پہنچے ہوئے تھے۔ وہیں ایک فریق فاروق کے بیٹے عمر بھی پہنچ گئے تھے۔

Sajid Qasmi

غفران ساجد قاسمی تعلیمی لیاقت : فاضل دارالعلوم دیوبند بانی چیف ایڈیٹر بصیرت آن لائن بانی چیف ایڈیٹر ہفت روزہ ملی بصیرت ممبئی بانی و صدر رابطہ صحافت اسلامی ہند بانی و صدر بصیرت فاؤنڈیشن

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker