ہندوستان

سنجیو بالیان نے کہا، کوئی معصوم جیل نہیں جائے گا، لیکن فسادیوں کو انجام تک پہنچائیں گے

مظفرنگر:12جنوری(بی این ایس )
شہریت ترمیمی قانون کی حمایت میں اتوار کو سرکاری انٹر کالج میں منعقد اجلاس میں مرکزی وزیر مملکت سنجیو بالیان نے کہاہے کہ 20 دسمبر کو کچھ لوگوں نے شہر کو جلانے کی کوشش کی ہے۔ 2013 میں شہر جلاتھا، ہم پہلے ہی چوٹ کھائے بیٹھے تھے۔ایک سازش اور یہ تو بھلا ہو مظفرنگر کے عوام کا، جنہوں نے مقابلہ کرکے فسادیوں کو بھگا دیا۔انھوں نے کہاہے کہ کوئی معصوم جیل نہیں جائے گا، لیکن جو فسادات کرنے کا کام کرے گا اسے انجام پر پہنچا دیا جائے گا۔ وہیں، پرمدھام ٹرسٹ کے بانی چندر موہن مہاراج نے 2020 میں آبادی قانون نافذکیے جانے کی بات کی۔انھوں نے کہاہے کہ برہمن پجاری کے ساتھ ساتھ ایک ایک پسماندہ اور انتہائی پسماندہ طبقہ کا پجاری ہونا چاہیے۔دراصل، اتوار کو سرکاری انٹر کالج کے میدان میںسی اے اے کی حمایت میں بی جے پی کی طرف سے ایک جلسہ عام ہوا اور اس کے بعد شہریت ترمیمی قانون کی حمایت میں ترنگا یاترانکالی گئی۔جس میںہزاروں خواتین، بچوں اور پرمدھام کے پیروکاروں نے شرکت کی۔ ترنگایاترا شہر کے اہم چوکوں سے ہوتے ہوئے میناکشی چوک سے ہوتے ہوئے سرکاری انٹر کالج پر ختم ہوئی۔سنجیوبالیان نے کہاہے کانگریس جنرل سکریٹری پرینکاگاندھی ووٹ بینک کی سیاست کرناچاہتی ہے۔یہاں بھی آئیں اورسب جگہ گئی ہیں۔وہ کسی اچھے کام میں تو جائیں گی نہیں۔جن لوگوں نے قانون کو ہاتھ میں لے کر فساد کیا ان کے گھر جا کر کیا میسیج دینا چاہتی ہیں؟ یہ ووٹ بینک کی جنگ ہے۔اب مسلم ووٹ بینک کو لے کر تمام پارٹیوں میں جنگ شروع ہوچکی ہے۔مسلمو ںکو بھڑکایا جا رہا ہے۔سی اے قانون کسی کی مخالفت میں نہیں ہے۔

Tags
Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker