ہندوستان

اس آندولن کو اتنا مضبوط کردیا جائے کہ حکومت گھٹنوں کے بل جھکنے پر مجبور ہوجائے: نوراللہ حبیب ندوی

شہریت ترمیمی قانون کیخلاف ململ میں بے مدت احتجاج کے۳۸ویں دن بھی مظاہرین کے حوصلے بلند،قابل مبارک باد ہیں ململ کی خواتین: فاتح اقبال ندوی
ململ،مدھوبنی:۲۱/فروری(بصیرت نیوزسروس)CAA، NPR،اور,NRCکے خلاف ہندوستان بھر کے لوگ سڑکوں پر آگئے ہیں، سیاست داں، قانون داں،سائنس داں، تاریخ داں، فلمستاں، طلبہ، طالبات،اور عالمی سطح کے جامعات کے پروفیسرس سب میدان میں آگئے ہیں، یہ تحریک د ن بہ دن مضبوط سے مضبوط تر ہوتی جارہی ہے،جس کے نتیجہ میں سرکار بیک فٹ پر آگئی ہے،اب تو اقوام متحدہ کے جنرل سکریٹری نے بھی موجودہ سرکار کے ذریعے نافذکردہ قانون سی اے اے کے خلاف فکرمندی کا اظہار کرتے ہوئے اس پر روک لگانے کی مانگ کردی ہے، دیکھنا یہ ہے کہ اس کا ہندوستانی حکومت پر کیا اثرپڑتا ہے۔
شاہین باغ کی طرز پر مدھوبنی کے ململ گاوئں میں بھی مودی سرکار کے غیر آئینی و غیر انسانی قوانین کے خلاف ۸۳دنوں سے خواتین و حضرات کا پرامن احتجاج زور و شور سے جاری ہے، اور انقلابی مردو خواتین انقلابی نظموں، نعروں، ترانوں اور گیتوں کے ذریعہ صدائے احتجاج بلند کررہے ہیں، یہاں کی شاہین صفت ماوئں اور بہنوں کے ساتھ عقابی نظر نوجوانوں اور بوڑھوں نے وزیر اعظم کے بگڑے بول”ہم ایک قدم بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے“ کا جواب دیتے ہوئے اس بات کا تہیہ کرلیا ہے کہ اگر مودی ایک قدم بھی پیچھے ہٹنے کے لیے تیار نہیں ہیں تو نہ ہٹیں،ہم بھی ایک ملی میٹر بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے، اور یہ جاری اسی مضبوطی سے جاری رکھیں گے،چاہے جو ہوجائے،۔
اس احتجاجی مظاہر ے سے روز ہی قرب وجوار کے سیکولر دانشوران کے علاوہ باہر سے تشریف لائے مہمان اپنی باتیں رکھ کر ان کی ہمت افزائی کررہے ہیں، آج بھی جھارکھنڈ سے تشریف لائے مہمان متحرک و فعال سیاست داں اور جھارکھنڈ مکتی مورچہ کے کارکن نوراللہ حبیب ندوی نے مظاہرین سے خطاب کرکے حوصلہ بخشا، انہوں نے کہا: کہ اس آندولن کو مزید مضبوطی کی ضرورت ہے، اس آندولن کو اتنا تیز کردیا جائے کہ موجودہ فسطائی سرکار کو جھکنے پر مجبور ہوجائے،مسٹرندوی نے یہ بھی کہا کہ آئین بچانے کی اس لڑائی میں ہماری بہن اور بیٹاں اپنے آنچل کو پرچم بناکر سر دھڑکی بازی لگادینے کے جذبے سے سرشار ہوکر میدان میں آنکلی ہیں اور ان شاء اللہ اس وقت تک یہ محاذ پر ڈٹی رہیں گی، جب تک سرکار مفاد عامہ کے پیش نظر یہ قوانین واپس نہ لے لے۔ دیگر مقررین کے ساتھ ہی ململ کے متحرک و فعال نوجوان عالم دین اور سیاسی شعور سے لیس سماجی کارکن مولانا فاتح اقبال ندوی قاسمی نے بھی مظاہرین کی حوصلہ افزائی کی، مولانا نے کہا: جب تک سرکار ضد اور ہٹ دھرمی چھوڑ کے سی اے اے اور این پی آر جیسے سیاہ قوانین واپس نہیں لیتی تب تک مظاہرے ہوتے رہیں گے،اور اس سے زیادہ مضبوطی سے ہونگے، اور اتنی شدت کے ساتھ ہونگے کہ حکومت کو عوام سے معافی مانگنی پڑے گی، اس احتجاج میں قرب وجوار کے بھائی چارہ پر یقین رکھنے والے غیر مسلم برادران وطن بھی شریک ہوکر سرکار کیخلاف اپنی ناراضگی درج کرا رہے ہیں،خوشی کی بات یہ یہ ہے کہ ۸۳ دنوں سے یہاں کے مرد وخواتین میدان میں ڈٹے ہوئے ہیں، ان کی پائے استقامت میں کسی طرح کی لرزش بھی نہیں ہے، ان کے حوصلے دن بہ دن اور مضبوط ہوتے جارہے ہیں۔

Tags
Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker